تصویر اور زبانی تاریخ میں نسبت

اگر نئے زمانے میں تصویر کھینچنے کے مختلف وسائل اور معاشرتی رابطوں میں آلات کے پھیلاؤ کی مدد سے، تصویر نے لوگوں کی زندگی اور عام ہونے میں ایک اہم کردار پیدا کرلیا ہے، تو فطری سی بات ہے کہ تاریخ نگاری میں اس سے غفلت نہیں برتی جاسکتی۔

منظم انٹرویو اور غیر منظم انٹرویو

نئے طرز کا پہلا نیوز انٹرویو اپریل سن ۱۸۳۶ء میں نیوریارک کے ہیرالڈ اخبار میں چھپا۔انٹرویو لینے والا اُس زمانے کا ایک بہت ہی برجستہ اور نمایاں صحافی اور جس کا انٹرویو لیا گیا تھا وہ ایسا شخص تھا جس نے ایک مقتول کے بدن کو کشف کیا تھا

زبانی تاریخ اور اُس کی ضرورتوں پر انٹرویو – تیئیسواں حصہ

راوی سے بحث و مباحثہ

بنیادی طور پر انٹرویو لینے والے کی ایک ذمہ داری، راوی کے ذہن کو کریدنا اور راوی کو قدیمی واقعات، اُس کے ذہن میں پوشیدہ باتیں اور گذشتہ مشاہدوں کو یاد دلانے میں مدد کرنا ہے، لیکن اس کام کو حکم چلاکر اور خود کو بڑھا ثابت کرکے نہیں ہونا چاہیے

زبانی تاریخ اور اُس کی ضرورتوں پر انٹرویو – چوبیسواں حصہ

حافظہ کو اُبھارنا

ایک اور مشکل جس کا انٹرویو لینے والوں کو سامنا ہوتا ہے، وقت گزرنے اور مختلف موضوعات کی وجہ سے راوی کے حافٖظہ کا ضعیف ہونا ہے

زبانی تاریخ اور اُس کی ضرورتوں پر انٹرویو – پچیسواں حصہ

انٹرویو کا اختتام

انٹرویو لینے والے کی ذمہ داری ہے کہ نشست کے آخر میں، ٹیلی فون اور رابطہ قائم کرنے والے دوسرے ذرائع جیسے ایمیل اور ایڈریس راوی کو دے تاکہ اُس کے لئے انٹرویو لینے والے اور متعلقہ ادارے سے رابطہ قائم کرنا ممکن ہو

زبانی تاریخ اور اُس کی ضرورتوں پر انٹرویو – بائیسواں حصہ

انٹرویو کا دورانیہ

انٹرویو کے وقت کا دورانیہ، اُن امور میں سے ہے کہ انٹرویو کرنے والے کو اُس پر توجہ رکھنی چاہئیے اور وہ انٹرویو منظم اور ترتیب دینے کے بارے میں ضروری اقدامات انجام دے۔ اس بارے میں مندرجہ ذیل نکات کی رعایت کرنا ضروری ہے:

انقلاب کی پہچان اور وضاحت

روحانیت نے صفوی دور حکومت اور اس کے بعد ایران کے سیاسی اور معاشرتی قالب میں قائدانہ کردار ادا کیا ہے اور عوامی تحریکوں کو ابھارنے یا حرکت میں لانے میں اپنی مثال آپ ہے۔ روحانیت کا یہی کردار انقلاب اسلامی کی تشکیل، پیشرفت اور کامیابی کا باعث بنا اور پہلے سے زیادہ نکھر کر سامنے آیا اور پھر دنیا نے روحانیت کی معنوی اور سیاسی بالا دستی کا مشاہدہ کیا۔

زبانی تاریخ اور اُس کی ضرورتوں پر انٹرویو – اکیسواں حصہ

نئے سوالات

ہم یہ بات بیان کرچکے ہیں کہ انٹرویو سے پہلے اصلی موضوع سے متعلق سوالات کی ایک فہرست تیار کرلیں اور اُسے انٹرویو کیلئے اپنے ساتھ لے جائیں۔ واضح سی بات ہے کہ سوالات کا دائرہ صرف اس فہرست تک محدود نہیں رہے گا، انٹرویو لینے والا گفتگو کے دوران، نئے سوالات اور جدید نکات سے روبرو ہوگا تو اُسے چاہیے مطالب کی تکمیل اور اُن کی مزید وضاحت کیلئے اُن سوالات کو اٹھانے کیلئے اقدام کرے۔ ان سوالات کا تعلق زیادہ تر راوی کی گفتگو سے متعلق ہوتا ہے اور یہ اُس کی گفتگو میں دقت کرنے سے مل جاتے ہیں۔ اسی طرح محقق نئے سوالات پوچھ کر اور کہے جانے والی باتوں کے واضح ہونے کیلئے ایسے نکات بیان کرکے، اپنی توجہ اور دلچسپی کو راوی پر ظاہر کرسکتا ہے اور اس طرح وہ راوی کے مزید مطالب بیان کرنے کے انگیزہ کو ابھار سکتا ہے۔

سازشوں کی ناکامی پر ۵ جون کے قیام کو ناکام قیام کے طور پر پیش کرنے کا منصوبہ

روحانیت کی مخالفت اور مزاحمت نے شاہ او اس کے حواریوں کو صوبائی تنظیموں کے بل اور سفید انقلاب کے چھ نکاتی ایجنڈے کے حوالے سے یہ بتا دیا تھا کہ اس بار مقابلہ سخت ہے اور مد مقابل کوئی عام لوگ نہیں بلکہ طاقتور اور خاص مذہبی افراد ہیں

زبانی تاریخ اور اُس کی ضرورتوں پر انٹرویو – بیسواں حصہ

اچھی طرح کان لگا کے سننا (۲)

اچھا ہوگا اگر آپ انٹرویو کے دوران، کبھی سر کو ہلائیں کسی تائید کرنے والے لفظ جیسے "جی" یا "صحیح فرمایا" کا سہارا لیتے ہوئے راوی کی بات کو سمجھنے کا اظہار کریں
1
...
 
جنوبی محاذ پر ہونے والے آپریشنز اور سردار عروج کا

مربیوں کی بٹالین نے گتھیوں کو سلجھا دیا

سردار خسرو عروج، سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی کے چیف کے سینئر مشیر، جنہوں نے اپنے آبائی شہر میں جنگ کو شروع ہوتے ہوئے دیکھا تھا۔
لیفٹیننٹ کرنل کیپٹن سعید کیوان شکوہی "شہید صفری" آپریشن کے بارے میں بتاتے ہیں

وہ یادگار لمحات جب رینجرز نے دشمن کے آئل ٹرمینلز کو تباہ کردیا

میں بیٹھا ہوا تھا کہ کانوں میں ہیلی کاپٹر کی آواز آئی۔ فیوز کھینچنے کا کام شروع ہوا۔ ہم ہیلی کاپٹر تک پہنچے۔ ہیلی کاپٹر اُڑنے کے تھوڑی دیر بعد دھماکہ ہوا اور یہ قلعہ بھی بھڑک اٹھا۔